عورت کا مقام تحریر : وقار الحسن

0
130

عورت کے نام
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔تحریر : وقار الحسن

پچھلے کچھ دنوں سے پاکستان میں ایک نیا مگر عجیب و غریب فتنہ سر اٹھا چکا ہے
وہ فتنہ یہ کہ عورت کہتی ہے مجھے دوپٹہ نہیں چاہیے,مجھے چاردیواری نہیں چاہیے,
میرا آج کی اس پرتشدد عورت سے سوال ہے کیا اسے مغرب کی بے حیائ چاہیے
کیا اسے سیکیولر ازم چاہیے
کیا اس کو اسلام کی تعلیمات سے اس بھی زیادہ دوری چاہیے جتنی کہ وہ اختیار کرچکی ہے
افسوس ہوتا ہے کہ کچھ عقل سے عاری لوگ اور کچھ ناعاقبت اندیش عورتیں جن کو اپنے خاندان,اپنے حال پر رحم نہیں آتا
جن کو اسلام جیسا امن پسند دین بھلائ کی دعوت دیتا ہے مگر وہ مغرب کے بوسیدہ,گھٹیا اور مفلوج نظام کی پیروی کو ترجیح دیتے ہیں جوکہ ان کو جہنم کا ایندھن بنانے کے سوا کچھ نہ دے گادنیا اسلام قبول کررہی ہے کہ اسلام امن و فلاح کا دین ہے بھائ چارے کا دین ہے لیکن یہ عورتیں بیرونی غیر ریاستی عناصر کی ایماء پر اسلام کا مذاق اڑا رہی ہیں لیکن یاد رکھیں اگر آپ توبہ کو بھول کر بے حیائ کرتی رہیں تو آپ کو خدا کا عذاب پکڑے گا اور جہنم کا ایندھن بنیں گی اور اس وقت تک توبہ کا دروازہ بھی بند ہوچکا ہوگا
دنیا میں کوئ ایسا شخص نہیں ہے جو یہ ثابت کرسکے کہ اسلام عورتوں کے حقوق کا تحفظ نہیں کرتا یا اسلام میں عورتوں کی عزت نہیں ہے
اسلام نے تو عورت کو اتنی عزت دی ہے جتنی دنیا کا کوئ مذہب نہیں دے پایا

وماعلینا الالبلاغ
تحریر : وقار الحسن