سیشن کورٹ سےاختیار واپس لینے کے خلاف خلاف وکلاء سراپا احتجاج….صوبہ بھر میں ہڑتال وکلا عدالتوں میں پیش نہیں ہوئے فیصلے سے پولیس کے اختیارات میں اضافہ ہوگا واپسی تک وکلا احتجاج جاری رکھیں گے پاکستان بارکونسل

0
109

سیشن کورٹ سےاختیار واپس لینے کے خلاف خلاف وکلاء سراپا احتجاج….. صوبہ بھر میں ہڑتال وکلا عدالتوں میں پیش نہیں ہوئے فیصلے سے پولیس کے اختیارات میں اضافہ ہوگا واپسی تک وکلا احتجاج جاری رکھیں گے پاکستان بارکونسل.
احمدپورسیال( سلطان نیوز) سیشن کورٹ سےاختیار واپس لینے کے خلاف وکلاء سراپا احتجاج….. صوبہ بھر میں ہڑتال وکلا عدالتوں میں پیش نہیں ہوئے فیصلے سے پولیس کے اختیارات میں اضافہ ہوگا واپسی تک وکلا احتجاج جاری رکھیں گے پاکستان بارکونسل… پنجاب بار کونسل کے بعد اسلام آباد بار کونسل اور ڈسٹرکٹ بار کونسل میں سیشن کورٹ سے 22 اے اور 22 بی کا اختیار واپس لینے کے خلاف سراپا احتجاج ہیں بار ایسوسی ایشن اور بار کونسل نے نئی جوڈیشل پالیسی پر تحفظات کا اظہار کرتے ہوئے سیشن کورٹ سے 22 اے اور 22 بی اختیار واپس لینے پر احتجاج کیا اور اس حوالے سے پنجاب بار کونسل نے صوبہ بھر میں ہڑتال کی اور وکلا عدالتوں میں پیش نہیں ہوئے آج بھی بروز ہفتہ وکلاء بار کونسل احمد پور سیال بھی پیش نہیں ہونگے وائس چیئرمین پنجاب بار کونسل کا کہنا تھا جوڈیشل پالیسی 2019 پر نظرثانی کی جائے سینئر وکلا کے ساتھ مشاورت کے بعد جوڈیشل پالیسی تشکیل دی جائے جوڈیشل پالیسی کمیٹی کے اندراج مقدمہ درخواستوں کی براہراست عدالتوں میں دیر گئی پر پابندی کی سفارش کی تھی دوسری جانب سے اسلام آباد بار کا کہنا تھا کہ اسلام آباد بار نئی جوڈیشل پالیسی کی فوری واپسی کا مطالبہ کرتی ہے فیصلے سے پولیس کو اجارہ داری حاصل ہوگی 22 اے اور 22 بی اختیار سیشن کورٹ سے لینے سے کرپشن کا راستہ کھلے گا 22 اے اور 22 بی کی واپسی تک وکلا احتجاج جاری رکھیں گے کیونکہ نئے جوڈیشل پالیسی میں 22 ہے اور باعث بھی کا اختیار واپس لینا آئین اور قانون سے متصادم ہے
رپورٹ مدثر شاہ سلطان نیوز احمد پور سیال