سیالکوٹ ۔قتل کے مجرموں کو عمر قید ہونے پر ان کے ورثا نے مدعی اور گواہوں کا جینا حرام اورصلح کے لیئے دباؤ ڈالنا شروع کردیا پولیس مجرموں کی حامی بن گئی

0
69

سیالکوٹ ۔قتل کے مجرموں کو عمر قید ہونے پر ان کے ورثا نے مدعی اور گواہوں کا جینا حرام اورصلح کے لیئے دباؤ ڈالنا شروع کردیا پولیس مجرموں کی حامی بن گئی
سیالکوٹ پسرور (سلطان نیوز): تھانہ سبز پیر کے گاؤں للیال میں 3سال قبل بچوں کی لڑائی سے مشتعل ہوکر محمد سعید،جبران سعید،نصیر احمد اور امیر احمد وغیرہ نے فائرنگ کر کے 55سالہ کاشتکار محمد یوسف کو قتل کردیا تھا ملزمان کے خلاف مقدمہ نمبر132/16درج ہوا جس پر عدالت نے جرم ثابت ہونے پر مجرموں نصیر ،جبران اور سعید کو عمر قید سنادی جبکہ امیر احمد کو شک کا فائدہ دے کر بری کردیا عدالتی فیصلے کے بعدمجرموں کے رشتہ داروں عدنان نصیر ،عرفان نصیر ،شاہد بشیراور دیگر نے مدعی پارٹی پر صلح کے لیئے دباؤ ڈالنا شروع کردیا تھانہ سبز پیر کا سب انسپکٹر آفتاب مبینہ طور پر ملزمان کے ساتھ مل کر الٹا مدعی پارٹی کے خلاففائرنگ کا بے بنیادمقدمہ درج کروا دیا ہے سب انسپکٹر آفتاب مدعی پارٹی پر دباؤ ڈال رہا ہے کہ وہ15لاکھ لے کر عمر قید پانے والے مجرموں کو رہائی دلادیں جب مدعی نہ مانے تو 2نامعلوم مسلح ملزمان نے پہلے مقدمہ قتل کے گواہ محمد مسلم کے گھر پر فائرنگ کی پھر مقتول کاشتکار محمد یوسف کے بیٹے مقصود احمد کو اہل خانہ سمیت قتل کرنے کی دھمکیاں دینے لگے مقصود احمد اور محمد مسلم نے چیف جسٹس آف پاکستان اور وزیر اعظم پاکستان سے اپیل کی ہے کہ ان کو تحفظ فراہم کیا جائے قتل کی دھمکیاں دینے اور ملزموں کا ساتھ دینے والے کرپٹ سب انسپکٹر آفتاب کے خلاف سخت تادیبی کارروائی کی جائے اور ہمارے خلاف درج فائرنگبے بنیاد مقدمہ ختم کیا جائے انہوں نے کہا کہ اگر انہیں تحفظ فراہم نہ کیا گیا تو وہ وزیر اعظم ہاؤس کے سامنے خود سوزی کرلیں گے ۔دریں اثنا سب انسپکٹر آفتاب نے الزامات کی صحت سے انکار کیا ہے۔

رپورٹ زبیر احمد صدیقی سلطان نیوز سیالکوٹ