سانحہ ساہیوال۔پس پردہ حقیقت کیا ہے۔ ( میری بات ) کالم نگار رانا عاشق علی سیالکوٹ

0
206

سانحہ ساہیوال۔پس پردہ حقیقت کیا ہے۔

( میری بات )

کالم نگار رانا عاشق علی سیالکوٹ

بالآخر محافظوں کو ایک بے گناہ فیملی اور ڈرائیور کو قتل کرنے کی کیا مجبوریاں تھیں۔۔۔؟؟؟
سانحہ ساہیوال کی جتنی مذمت کی جائے کم ہے دلخراش درناک واقعے کی مذمت کے لئے الفاظ کا انتخاب کرنا ایک باشعور شخص جو درد دل رکھتا ہے اس کے لئے بہت مشکل ہے۔۔!!! ماضی میں شاید ہی ایسی درندگی اور بے حسی کی کوئی مثال ملتی ہو۔۔۔۔۔!!!
عینی شاہدین کے مطابق بے گناہوں کو بے دردی سے قتل کیا گیامقتولین کی طرف سے کوئی مزاحمت ہوئی اور نہ ہی کوئی فائر ۔ مقتول کے بیٹے کے مطابق پاپا نے سی ٹی ڈی اہلکاروں سے منت سماجت کی کہ ہمیں نہ مارو پیسے لے لو۔۔۔۔ عینی شاہدین کے مطابق مقتولین کو قتل کرنے کے بعد اہلکاروں کی آپس میں جھڑپ بھی ہوئی کہ یہ کیا کردیا بچوں کی موجودگی میں فائر کیوں کئے گئے ایک دوسرے کو کہنے لگے ہمیں نہیں پتہ تھا اندر بچے بھی ہیں۔۔۔۔۔ بچے نکال کر پھر فائر کئے گئے۔۔۔
جے آئی ٹی رپورٹ تو ایک نااہلی ہوتی ہے ایک واقعہ سامنے ہونے کے باوجود وقت ضائع کیا جاتا ہے کوئی سرا تلاش کیا جائے تاکہ گنہگار کو بچایا جاسکے یہ واقعہ دن دیہاڑے پیش آیا تمام صورت حال سامنے ہے ۔۔۔۔وزراء کی سی ٹی ڈی کی بے گناہی میں میدان میں اترنا اور پریس کانفرنس کرنا خود کی نااہلی کو چھپانا تھا جو چھپ نہ پائی ایک طرف۔۔۔ اپوزیشن کا شورشرابہ
اسمبلی کے اندر اور باہر اظہار ہمدردی ایک ڈرامہ کیونکہ وہ ایسے واقعات کے خود ماسٹرماینڈ رہ چکے ہیں ماسوائے سیاست کھیلنے کہ اور کچھ بھی نہیں شرم ہم کو آتی نہیں ۔۔۔۔!!!
دوسری طرف ذیشان کی والدہ اور بیوی نے اندھے حکمرانوں سے مطالبہ کیا ہے خدارا میرے بچے اور خاوند کو قتل کرچکے اس پر دہشتگردی کا الزام لیبل نہ لگائیں ۔۔۔۔
ذیشان جس کو دہشتگرد قرار دینے کی کوشش کی گئی تحریک انصاف کی رہنما عندلیب نے اس بات کی تصدیق کردی ہے ذیشان دہشتگرد نہیں میں ذاتی طور پر جانتی ہوں۔۔۔۔۔۔
الغرض زمینی حقائق و شواہد کے مطابق یہ ثابت ہوچکا خلیل ‘ خلیل کی بیوی بیٹی اور ذیشان کو ناحق قتل کیا گیا۔۔۔۔۔۔
سوچنے اور سمجھنے والی بات یہ ہے بالآخر سی ٹی ڈی اہلکاروں نے بےگناہ افراد کا سرعام قتل کیوں کیا ماسٹرماینڈ کون تھا سی ٹی ڈی کے کندھوں پر بندوق رکھ کر کس نے چلائی ایسے کوئی کسی کی جان نہیں لے سکتا۔۔۔۔۔۔۔۔
وزیراعظم پاکستان کو ذاتی حثیت سے انکوائری ایک دو روز میں کروا کر مجرموں کو قرار واقعی سزا دلوائیں۔۔۔ باقی کوئی اہل اور قابل نہیں ۔۔۔۔ جے آئی ٹی کا کھیل عوام کے ساتھ نہ کھیلیں۔۔۔۔۔۔