شجرہ نسب اورتعارف حضرت الشیخ محبوب باری اول سیدناابرہیم ابوالحسن علی نوری ہنکاری تحریر جام محمداصغرحمیدی سہروردی

0
259

شجرہ نسب اورتعارف حضرت الشیخ محبوب باری اول سیدناابرہیم ابوالحسن علی نوری ہنکاری

تحریر جام محمداصغرحمیدی سہروردی

اپ رح 409ہ 1017ء کوپیداہوے اپ رح کاسن وصال ہے 484ہ 1093ء کوہنکارمیں ہوا اپکامزارمبارک جبل ہنکارہے بغدادشریف اپ رح سلسلہ عالیہ قادریہ کے بزگوں کے شیخ طریقت ہیں حضرت غوث العظم عبدالقادرجیلانی کے مرشدابوالسعیدمبارک المخذومی کے شیخ طریقت ہیں سلسلہ عالیہ سہروردیہ برصیغرپاک ہیندکے عظیم روحانی پیشواحضرت سلطان التارکین سیدناحمیدالدین شاہ حاکم درگاہ عالیہ مومبارک ضلع رحیم یارخان کے جدامجدہیں
شجرہ نسب ابرہیم ابوالحسن علی ہنکاری بن یوسف بن محمدبن عمربن عبدالواہاب جعفربن امیرزیدابوالہاشم بن امام محمدالمعروف محمدبن حنفیہ اکبرالحارث الصغربن امام سیدناعلی المرتضی بن ابی طالب بن عبدالمطلب بن ہاشم بن مناف اپ کی ہی کی اولادنے کیچ مکران ہجرات کی اورحکمران اف کیچ مکران بنے اخیری حکمران کیچ مکران حمیدالدین حاکم تہے جہنوں نے تخت تاج چہوڑکرسلطان التارکین کاتاج پہنااورسلسلہ سہروردیہ کاخرقہ حاصل ہواحضرت ابوالفتح شاہ رکن عالم نوری حضوری سہروردی سے اورجوباپہناء سرکادشہنشاہ سہروردشہاب الدین عمرسہروردی سے نیٹ پرغلام دستگیرنامی کی کتاب تاریخ جلیلہ کاذکرہے اس میں شیخ ابوالحسن علی ہنکاری کاشجرہ نسب غلط درجہ ہے یہ شجرہ جوسلطان نیوزکے تعاون سے تحیق کیاگیاہے یہ حضرت حمیدالدین حاکم کے ہاتہ لکہی کتابیں معلفوظ حمیدیہ اوگلزارحاکمی جوموجودہ سجادہ نشین درگاہ عالیہ حمیدیہ سہروردیہ مومبارک سابق وفاقی وزیرمخدوم شہاب الدین شاہ اسدی الہاشمی سہروردی کے پاس اصل فارسی زبان کے نسخہ موجود ہے اورشیخ شہراللہ لنگاء کی مشہورکتاب تذکرہ حمیدیہ میں یہ درجہ ہے جمال الدین بن عبدالرازق قریشی کی مشہورکتاب تحفتہ لزکراین میں یہ درجہ ہے سلسلہ عالیہ کے بزرگ حافظ صدیق القادری بہرچونڈی سندہ خلیفہ درگاہ محمدحسن جیلانی سوی شریف سندہ کی کتاب جامع عرفان میں درجہ ہے 23کتابوں سے تحیق کے بعدسابق ایم این اے مخدوم عمادالدین شاہ ہاشمی نے کتاب لکہی ہے شیخ حمیدالدین حاکم اوربزرگان سہرورد اس میں یہ درجہ ہے اورزیرنذرتصویرمیں گلدستہ بناہوا ہے اس میں یہ شجرہ ہے
تحریر تحریر جام محمداصغرحمیدی سہروردی
رحیم یار خان 03009679545