قافلہ اھل حق کا بچھڑا ہوا مسافر۔۔۔۔۔۔چوھدری محمد ریاض جٹؒ۔۔۔۔۔۔۔۔۔تحریر۔۔۔۔محمدعمر حیدری۔۔۔۔۔۔ مکمل تحریر پڑھنے کیلئے لنک پر کلک کریں

0
81

قافلہ اھل حق کا بچھڑا ہوا مسافر
تحریر۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔محمدعمر حیدری
چوھدری محمد ریاض جٹؒ ضلع جھنگ کی تحصیل احمد پور سیال کی ایک ایسی عظیم شخصیت تھی کہ جس نے اپنی زندگی کے 35 سال تحفظ ناموس رسالتﷺاور تحفظ ناموس صحابہؓ واھلبیتؓ کی خاطر مشن حق نواز جھنگوی شھیدؒ سے وفا کرتے ہوے گزارے
امام سنی انقلاب حضرت جھنگوی شہیدؒ نے جب انجمن سپاہ صحابہؓ بنائی تو جماعت کے اولین ساتھیوں میں ایک نام چوھدری ریاض جٹ کا بھی آتا ہے وفا کی اتنی اعلی مثال تھا کہ آخری دم تک تحفظ ناموس صحابہؓ پر کوئی لچک نرمی مفاد پرستی اسکے قریب بھی نہیں آئی تھی
قیام امن کیلئے اسکی بے مثال قربانی ہمیشہ تاریخ احمدپور سیال میں یاد رکھی جاے گی اپنے ساتھیوں کارکنوں سےبے لوث محبت کرنے والا اور زمانے کی نرم گرم ہواوں سے اپنی جماعت کو بچا کر چلنے والا ایک شفیق مہربان اور شجر سایہ دار لیڈر تھا ۔بیسیوں بار امن کمیٹیوں کے اجلاسوں میں ناموس صحابہؓ کی خاطر ڈٹ جایا کرتا تھا محرم الحرام میں مقامی حکومت و انتظامیہ چوھدری ریاض جٹ کی مرہون منت ہوتی تھی ۔۔۔۔
مولانا جھنگوی شہید سے لیکر مولانا لدھیانوی صاحب تک تمام قائدین کے شانہ بشانہ دست راس اورمشن کے ساتھ مخلصی اسکی پہچان تھی۔35 سالوں میں جماعت پر بڑے بڑے حالات آے بڑے نشیب و فراز آے مگر چوھدری ریاض نہ تو کبھی کسی ظالم کے آگے جھکا اور نہ ہی کسی قیمت پر بکا۔
اے پی سیال کا سابقہ ایم این اے نجف خان سیال انتہائی مزہبی سیاسی مخالف تھا اسکے گھر کے سامنے گھرہے مگر مجال ہے کہ کبھی کسی بھی مشکل گھڑی میں اسکےدروازے پرگیاہو؟۔۔۔۔ پچھلے سال2017 میںmna نجف خان سیال نےپیغام بھیجا کہ ریاض جٹ صاحب! ٹی ایم اے میں ایک نوکری ہے آپ اپنے بیٹے کو دلوالیں مگر جٹ صاحب نےکہا کہ قطعاً نہیں لوں گا میں نے ساری زندگی صحابہؓ کی نوکری کی ہے آج میرا بچہ جوان ہوا ہے تو اولاد کیلئے میں اپنی وفاوں اور قربانیوں پر پانی پھیر دوں? ہرگزنہیں بالآخر اپنے بیٹے حسن معاویہ کو پرائویٹ جاب دلوادی۔ علامہ۔محمد احمد لدھیانوی صاحب سے بے پناہ محبت کرنےوالے تھے اور حضرت بھی چوھدری ریاض کی بہت قدر کرتے تھے میں نے آج چوھدری ریاض کے جنازے پر حضرت کو بہت زیادہ روتے ہوے دیکھا یہ محبت ناموس صحابہؓ کی خاطر تھی جو دلوں میں گھر کرگئی تھی۔
اس دفعہ محرم میں ملک بھر میں دشمنان صحابہؓ کیطرف سے تبرا بازی کے بازار گرم رہے اور پاکستان کے حالات کشیدہ کرنے کی مزموم کوشش کی گئی مگر اللہ کے فضل و کرم سےصحابہؓ کے سپاہیوں نے بروقت قانون کا دروازہ کھٹکھٹایا اور آفرین ہے انتظامیہ اور اداروں پر کہ انہوں نے فوراً ایکشن لیا اور شر پسندوں کو گرفتار کیا۔۔اس دفعہ محرم میں تحصیل احمدپور سیال میں آٹھ مقدمے ہوے گستاخان صحابہ پر وہ بھی ثبوت کے ساتھ ان آٹھوؔں مقدموں کا سہرا چوھدری صاحب کے سر ہے اللہ ان کے درجات بلند فرماےآمین
پچھلے سال 2017 میں چوھدری ریاض جماعتی ساتھیوں کے ہمراہ میرے پاس لیہ تشریف لاے اور فرمایا کہ آپ ہمارے شہر میں مستقل آجائیں اور بہت اصرار کیا کہ۔ہمارے شہر میں آپکی ضرورت ہے لوگ بہت چاہت رکھتے ہیں چنانچہ میں نے اپنے والدین اور جماعت کی قیادت سے مشورہ کیا اور اس رمضان المبارک میں مئی 2018 کو مستقل ہجرت کرکے احمدپور سیال شفٹ ہوگیا بہت ہی محبت کرنے والے مہربان تھے آج ان کی جدائی ہمیں یتیمی کا احساس دلارہی ہے۔۔۔۔۔۔۔ایسے لوگ صدیوں میں پیدا ہوتے ہیں
ہزاروں سال نرگس اپنی بے نوری پہ روتی ہے
بڑی مشکل سے ہوتا ہے چمن میں دیدہ ور پیدا
وفات سے تین دن پہلے شہر کے کارکنوں کو بلا کرانکی دعوت کی اور کھانا کھلایا پھر بہت ساری نصیحتیں کیں اور یہ بھی فرمایا کہ میں بہت سارا بیمار ہوں نہ جانے کب موت کا وقت آجاے اسلئے آپ لوگ ہمت سےکام لیں جماعت کا کام اخلاص کے ساتھ کریں۔۔۔اپنے کردار پر فرمایا کہ اگر مجھے اجازت دیدو میں ایک ماہ میں اپنی کوٹھی جماعت کے فنڈ سے بنا سکتا ہوں مگر میں نے ایسا کبھی سوچا بھی نہیں ہے کیونکہ میں نے مولانا جھنگوی شہید کے ہاتھ پربیعت کی ہوئی ہے میں اسی پر مرناچاہتا ہوں
سلام اے وکیل اصحاب محمدﷺ چوہدری ریاض جٹ کہ تو نے لگائی توڑ نبھائی ہے روز محشر تیرا نام بھی ان شااللہ قافلہ حق کے راہیوں میں ہوگا اللہ تیری لحدپر ضوفشانی فرماے اور ورثاء کو صبرجمیل عطافرماے
اور ہم سب کو ان کی طرح بےلوث مدح صحابہؓ عام کرنے کی توفیق عطا فرماے آمین ۔۔تاریخ وفات24/10/2018
خاکپاے صحابؓہ واھلبیتؓ