سابق آصف زرداری کی ایک ہفتے کے اندر اندر گرفتاری کا امکان، چیف جسٹس نے جعلی اکاونٹس کیس ایک ہفتے میں منطقی انجام تک پہنچانے کا بڑا اعلان کر دیا، مکمل تفصیلات جاننے کیلئے لنک پر کلک کریں

0
49

سابق آصف زرداری کی ایک ہفتے کے اندر اندر گرفتاری کا امکان، چیف جسٹس نے جعلی اکاونٹس کیس ایک ہفتے میں منطقی انجام تک پہنچانے کا اعلان کردیا۔ تفصیلات کے مطابق چیف جسٹس آف پاکستان جسٹس میاں ثاقب نثار نے جعلی اکاونٹس کیس ایک ہفتے میں منطقی انجام تک پہنچانے کا اعلان کردیا ہے۔ چیف جسٹس کا کہنا ہے کہ جعلی اکاونٹس کیس ایک ہفتے میں منطقی انجام تک پہنچ جائے گا۔
چیف جسٹس کے اس اعلان کے بعد ذرائع کا کہنا ہے کہ اب سابق صدر اور پیپلز پارٹی کے شریک چئیرمین آصف زرداری کی گرفتاری کے واضح امکانات نظر آ رہے ہیں۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ اب تک جعلی اکاونٹس کیس کے سلسلے میں جو جو تفصیلات سامنے آئی ہیں۔ ان تفصیلات کے مطابق سابق صدر اور پیپلز پارٹی کے شریک چئیرمین آصف علی زرداری اس تمام معاملے کے مرکزی کردار معلوم ہو رہے ہیں۔
جبکہ آصف علی زرداری کے علاوہ ان کی بہن فریال تالپور اور پیپلز پارٹی کے دیگر کئی سینئر رہنماوں کے گرد بھی جعلی اکاونٹس کیس کے تحت گھیرا تنگ ہو چکا ہے۔ اسی لیے اب آصف زرداری کی گرفتاری کے واضح امکانات ہیں۔ اس حوالے سے سابق صدر اور پیپلز پارٹی کے شریک چئیرمین آصف علی زرداری گزشتہ دنوں ایک پریس کانفرنس کے دوران خود بھی اشارہ دے چکے ہیں۔
آصف زرداری کا کہنا تھا کہ ان کیلئے گرفتاریوں کا سلسلہ کوئی نئی بات نہیں۔ وہ ماضی میں بھی جیل کا چکے ہیں، اس لیے وہ ایسی باتوں سے نہیں ڈرتے۔ واضح رہے کہ سپریم کورٹ کی جانب سے تشکیل دی گئی جے آئی ٹی اب تک جعلی اکاونٹس کیس کے سلسلے میں 1 کھرب روپے سے زائد کی منی لانڈرنگ کا سراغ لگا چکی ہے۔ امید ظاہر کی جا رہی ہے کہ یہ کیس اب جلد ہی اپنے منطقی انجام کو پہنچ جائے گا۔